بلوچستانپہلا صفحہ

بلوچستان کا جزیرہ استولہ،ایک خوبصورت تفریح مقام

سہب حال

بلوچستان کا جزیرہ استولہ،ایک خوبصورت تفریح مقام

پسنی استولہ سے 35 کلومیٹر دور ایک ملاحی قصبہ ہے۔شفاف ساحلی کنارے پر جبلِ زرین (خوبصورت پہاڑ)  ارد گرد سنہری ریت کے ٹیلے نظر آتے ہیں۔استولہ کو جزیرہ ہفت تلار بھی کہا جاتا ہے جس کی وجہ وہ سات چھوٹی، چٹانی پہاڑیاں ہیں جو 15 مربع کلومیٹر کے جزیرے پر پھیلی ہیں۔

جزیرہ استولہ ،جسے بلوچی میں جیزیرا ہفت تلر بھی کہا جاتا ہے ،ایک چھوٹا سا غیر آباد جزیرہ ہے جو ساحل کے قریب ترین حصے سے تقریبا 25 کلومیٹر (16 میل) جنوب میں اور پسنی کی ماہی گیری کی بندرگاہ کے جنوب مشرق میں 39 کلومیٹر (24 میل) جنوب مشرق میں ہے۔

آسٹولا پاکستان کا سب سے بڑا سمندر ساحل ہے جو تقریبا 6. 6.7 کلومیٹر (4.2 میل) لمبا ہے جس کی زیادہ سے زیادہ چوڑائی 2.3 کلومیٹر (1.4 میل) ہے اور اس کا رقبہ تقریبا 6. 6.7 کلومیٹر 2 (2.6 مربع میل) ہے۔ اعلی سطح سمندر کی سطح سے 246 فٹ (75 میٹر) ہے۔ 

سمندر سے پسنی کا نظارہ جہاں سنہری ریت کے ٹیلے نظر آ رہے ہیں

سمندر سے پسنی کا نظارہ جہاں سنہری ریت کے ٹیلے نظر آ رہے ہیں
سمندر سے پسنی کا نظارہ جہاں سنہری ریت کے ٹیلے نظر آ رہے ہیں

صاف و شفاف پانی کے فیروزی رنگ کا دنگ کردینے والا خوبصورت نطارہ

 صاف و شفاف پانی کے فیروزی رنگ کا خوبصورت نظارہ
صاف و شفاف پانی کے فیروزی رنگ کا خوبصورت نظارہ

استولہ کی چٹانوں سے پانیوں کا نظارہ،دور سے پانی میں تیرتی کشتیاں بھی نظر آرہی ہیں

استولہ کی چٹانوں سے پانیوں کا نظارہ
استولہ کی چٹانوں سے پانیوں کا نظارہ

جزیرہ استولہ سے ٹکراتی،اٹھکیلیاں کھاتی سمندر کی لہروں کا دلکش نطارہ

دوپہر میں جزیرے سے ٹکراتا سمندر پرسکون محسوس ہوتا ہے
دوپہر میں جزیرے سے ٹکراتا سمندر پرسکون محسوس ہوتا ہے

جزیرے کی  پہاڑیوں سے غروبِ آفتاب کا ایک دلکش نظارہ

جزیرے کی پہاڑیوں سے غروبِ آفتاب کا ایک دلکش نظارہ
جزیرے کی پہاڑیوں سے غروبِ آفتاب کا ایک دلکش نظارہ

سمندری بگلے ساحل سمندر پر پانی میں مچھلیاں تلاش کر رہے ییں

سمندری بگلے ساحل سمندر پر پانی میں مچھلیاں تلاش کر رہے ییں
سمندری بگلے ساحل سمندر پر پانی میں مچھلیاں تلاش کر رہے ییں

ملاحوں کا مچھلیوں کو پکڑنے کے لئے  سمندر میں جال پھینکنے کا ایک منظر

ملاح مچھلیوں کو پکڑنے کا جال سمندر میں پھینک رہے ہیں
ملاح مچھلیوں کو پکڑنے کا جال سمندر میں پھینک رہے ہیں

سمندری پانی میں تیرتی خوبصورت کشی کا منظر

سمندری پانی میں تیرتی خوبصورت کشی کا منظر
سمندری پانی میں تیرتی خوبصورت کشی کا منظر

استولہ جزیرے پر موجود محدود سبزہ اور درختوں کے جھنڈ سے پہاڑوں کا نظارہ

جزیرے پر موجود محدود سبزہ
جزیرے پر موجود محدود سبزہ

استولہ جزیرے  پر سمندر کے بیچوں بیچ ایک بلند و بالا  انوکھے طرز کی چٹان کا خوبصورت نطارہ

استولہ جزیرے  پر ایک بڑا انوکھا سا پتھر اور چٹان کاخوبصورت نطارہ
استولہ جزیرے  پر ایک بڑا انوکھا سا پتھر اور چٹان کاخوبصورت نطارہ

کشتی سے جزیرے کا ایک منظر

بلوچستان کے ساحل سمندر پر غروب آفتاب کا شاندار نظارہ

بشکریہ تصاویر ڈان نیوز

بلوچستان کی صوبائی حکومت نے آسٹولا جزیرے کو ’’ سمندری تحفظ والا علاقہ ‘‘ قرار دیا،محکمہ جنگلات و وائلڈ لائف کے جاری کردہ ایک نوٹیفکیشن کے مطابق ، ضلع گوادر میں واقع جزیرے کو انواع ، رہائش ، حیاتیاتی تنوع اور ماحولیاتی عملوں کے تحفظ ، تحفظ اور بحالی کے پیش نظر محفوظ علاقے کے طور پر درجہ بندی کی گئی ہے 

ٹیگز
Show More

متعلقہ خریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close