کھیل کھلاڑی

قومی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان سرفراز احمد 33 برس کے ہو گئے

سپورٹس ڈیسک (سہب حال)

قومی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان سرفراز احمد نے زندگی کی 33 بہاریں دیکھ لیں

  •  سرفراز احمد کی قیادت میں پاکستان نے 2017 میں چیمپئنز ٹرافی اپنے نام کی

  • سرفراز احمد 22 مئی 1987 کو کراچی میں پیدا ہوئے

  •  سرفراز احمد نے 49 ٹیسٹ میچوں میں 2657 رنز بنا رکھے ہیں

  • سابق کپتان نے 116 ون ڈے میں 2302 سکور کئے ہیں

  • وکٹ کیپر بلے باز نے 58 ٹی ٹوئنٹی انٹرنیشنل میں 812 رنز بنائے ہیں

  • سرفرازاحمد کی کپتانی میں پاکستان نے بھارت کو ہرا کر انڈر 19 ورلڈکپ 2006 کا ٹائٹل اپنے نام کیا۔

  • نومبر 2007ء میں بھارت کے خلاف جے پور میں ایک روزہ بین الاقوامی کرکٹ کیریئر شروع کیا

  • فروری 2017 میں سرفراز احمد ون ڈے کپتان بنے اور جون میں پاکستان بھارت کو شکست دیکر چیمپئنز ٹرافی کا ونر ٹھہرا

  • 2019میں سرفراز کے ستارے گردش میں آنا شروع ہوئے اور وہ تنازعات میں گھرتے گئے

  • دورہ جنوبی افریقہ کے دوران پروٹیز باؤلر پھلکوائیو پر نسل پرستانہ جملے کسنے کی پاداش میں ان پر چار میچوں کی پابندی لگی

  • قومی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان سرفراز احمد کے مذکورہ واقعے پر پی سی بی نے اپنا ردِ عمل ظاہر کیا تھا

  • قومی کرکٹ بورڈ نے نسلی تعصب پر مبنی تبصروں کو نا قابلِ برداشت قرار دے دیا تھا

  •   سرفراز احمد نے جنوبی افریقی کھلاڑی پر نسل پرستانہ جملے کسنے پر سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹویٹر پر معافی بھی مانگی تھی۔

  •  اسی سال ورلڈکپ میں بری پرفارمنس پر انہیں شدید تنقید کا سامنا رہا

  • اکتوبر 2019 میں دورہ آسٹریلیا سے قبل سرفراز احمد کو کپتانی سے ہی ہاتھ دھونا پڑ گئے۔

  • سرفراز احمد کی قیادت میں پاکستان ٹی ٹوئنٹی کی نمبرون ٹیم بنا۔

  • سرفراز احمد کی کپتانی میں کوئٹہ گلیڈی ایٹرز نے پی ایس ایل فور کے فائنل میں پشاور زلمی کو ہرا کر وننگ ٹرافی جیتی۔

  • 2018میں حکومت پاکستان کی جانب سے  انہیں ستارہ امتیاز سے نوازا گیا۔

  • سرفراز احمد اپنی  شاندار حس مزاح کی وجہ سے بھی پہچانے جاتے ہیں۔

  • نئے سنٹرل کنٹریکٹ میں بی کیٹیگری حاصل کرنیوالے سرفرازاحمد  ڈومیسٹک میں بہترین پرفارمنس کے ذریعے قومی ٹیم میں واپسی کیلئے پرامید ہیں۔

  • سرفراز کے مطابق بی کیٹیگری بھی اچھی اور اس میں بھی کئی اسٹارپلیئرز شامل ہیں

  • میری کوشش ہے کہ جب بھی قومی ٹیم میں واپسی کا موقع ملے تو عمدہ کارکردگی سے اپنی جگہ پکی کر لوں، اس کے لیے فارم اور فٹنس پر کام کر رہا ہوں۔

  • سرفراز احمد نے کہا کہ اتار چڑھاؤ کرکٹرز کے کیریئر کا حصہ ہوتے ہیں، میں ہر حال میں اللہ تعالیٰ کا شکر ادا کرتا ہوں

ٹیگز
Show More

متعلقہ خریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close